خاتون فنکارہ نے ریشم پرسونے کے پانی سے قرآن کا نسخہ تیارکیا

Updated: February 14, 2020, 2:55 PM IST | Agency | Baku

آذربائیجان سے تعلق رکھنے والی خاتون فنکارہ نے۳؍ سال کی محنت شاقّہ کے بعد ریشم پر سونےکی لکھائی سے قرآن پاک کا نسخہ تیارکر لیا ہے۔

خاتون فنکارہ نے ریشم پرسونے کے پانی سے قرآن کا نسخہ تیارکیا
آذربائیجان کی خاتون تنزیلے محمد زادے

 باکو : آذربائیجان سے تعلق رکھنے والی خاتون فنکارہ نے۳؍ سال کی محنت شاقّہ کے بعد ریشم پر سونےکی لکھائی سے قرآن پاک کا نسخہ تیارکر لیا ہے۔ 
 تفصیلات کے مطابق قرآن پاک سے محبت کرنے والے اسے اکثر اپنے انداز میں خوب صورت طریقے سے لکھ کر اپنی محبت کا اظہارکرتے رہتے ہیں۔ تاہم، اب ایک خاتون نے قرآن پاک کو ایک ایسے منفرد انداز میں تیار کیا ہےکہ اس سے قبل اس طرح کے اندازمیں شایدہی کسی نے مکمل قرآن پاک کبھی تیار کیا ہو۔اس خاتون نے ہاتھ کی کڑھائی سے ریشم کےکپڑے پر مکمل قرآن پاک لکھاہے۔ خاتون کا کپڑےپر کڑھائی کے ذریعے تیار کردہ قرآن توجہ کا مرکزبن گیاہے۔بتایا گیا ہے کہ تنزیلے محمد زادے نامی خاتون نے ریشم پر قرآن پاک تحریر کرنے کے لیے مسلسل ۳؍سال صرف کئے۔ خاتون نے اس وقت ریشم پر سونے کی لکھائی کا کام شروع کیا جب اسے معلوم ہوا کہ قرآن پاک کو مختلف قسم کے کپڑوں پر تحریر کیا جا سکتا ہے۔قرآن پاک کا ہر صفحہ ریشم سے بنایا گیا ہے۔تنزیلے نےقرآن پاک تحریر کرنے کی تیاری میں ایک لیٹر سے زائد مائع سونا اور چاندی کا استعمال کیا۔تنزیلے کے تیار کردہ قرآن پاک کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں جنہیں ترکی کی وزارت مذہبی اُمور کی جانب سے جاری کیا گیاہے۔تنزیلے نے ریشم پر تحریر کردہ قرآن پاک کو شاہکار قرار دیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ اس نسخے کو ریشم پر لکھنے کی وجہ یہ ہے کہ قرآن پاک میں متعدد بار ریشم کا ذکر کیا گیاہے۔
 واضح رہے کہ اس سے قبل مکہ مکرمہ میں جبل العمرمیں ’القرآن الکریم‘ نمائش میں ایک پاکستانی خاتون نسیم اختر کے کپڑےپرکڑھائی کے ذریعے تیار کردہ قرآن کے نسخے کو پیش گیاتھاجسےتیار کرنے میں ۳۱؍ سال لگے تھے۔ نسیم اختر کا تیار کردہ قرآن ۱۰؍ جلدوں پر مشمل ہے اور ہر جلد میں ۳؍ پارے ہیں، اس قرآن کی تیاری میں ۳۰۰؍ میٹر کپڑا اور ۲۵؍ہزار میٹر طویل دھاگہ استعمال ہوا ہے جبکہ قرآن کا ہر پارہ ۲۴؍ صفحات اور ہر صفحہ ۱۵؍ سطروں پر مشتمل ہے۔
 جبل العمر میں القرآن الکریم نمائش میں یہ قرآن ہزاروں افراد کی دلچسپی کا محور بنا رہا جس کا وزن ۵۵؍ کلو گرام ہے۔۶۲؍ سالہ خاتون کادعویٰ تھاکہ ہاتھ کی کڑھائی سے تیارکیا جانے والا قرآن مجید کا یہ نسخہ واحد ہے جو ایک ہی عورت کےہاتھ سے بناہے، اس میں کسی کی مدد شامل نہیں بلکہ سب ان کی اپنی کاوش ہے۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK