ریلائنس انڈسٹریز نے اپنے حقوق فروخت کیلئے جاری کئے،۵۳ ؍ہزار کروڑ کی آمدنی متوقع

Updated: May 22, 2020, 10:49 AM IST | Agency | New Delhi

اپنے سب سے بڑے رائٹس ایشو سے حاصل کئے جانے والے فنڈ کاتین چوتھائی یعنی تقریباً۷۵؍فیصد کا استعمال کمپنی قرض چکانے میں کریگیa

Reliance Ind - PIC : INN
ریلائنس انڈسٹریز اب حقوق کے اجراء کے ساتھ میدان میں اتری ہے تصویر : آئی این این

ریلائنس انڈسٹریز لمیٹڈ(آر آئی ایل)نے اپنی ۳۰؍ سالہ تاریخ میں پہلی بار اور ملک کا سب سے بڑا رائٹس ایشو (حقوق کا اجراء)لے کر آئی ہے۔ کمپنی کا رائٹس ایشوبدھ کو کھلا  اور ۳؍ جون کو بند ہو گا۔ رائٹس ایشو کے ذریعہ کمپنی۵۳۱۲۵؍ کروڑ روپے جٹانے والی ہے۔ ایسے میں سوال یہ ہے کہ کمپنی اس فنڈ کا استعمال کہاں کرنے والی ہے۔
 فنڈ کا استعمال کہاں ہوگا؟
 اپنے سب سے بڑے رائٹس ایشو سے حاصل کئے جانے والے فنڈ کاتین چوتھائی یعنی تقریباً۷۵؍فیصد کا استعمال کمپنی قرض چکانے میں کرےگی۔ حقوق کے دستاویزات  میں کمپنی نے اس کا ذکر کیا ہے۔حقوق کے دستاویزات کے مطابق کل فنڈ میں  سے ۳۹۷۵۵ء۰۸؍ کروڑ روپے کمپنی کے قرض کا پورا یاکچھ حصہ وقت پر یا وقت سے پہلے چکایا جائے گا۔باقی ۱۳؍ ہزار۲۸۱؍ کروڑ روپے کا استعمال کمپنی اپنے دوسرے کاموں میں کرے گی۔
  آر آئی ایل کے رائٹس ایشو کی  قیمت۱۲۵۷؍ روپے فی شیئر ہے۔اس میں سرمایہ کاروں کو چھوٹ یہ ہے کہ وہ فی الحال ۲۵؍ فیصد رقم دے کربھی یہ شیئر خرید سکتے ہیں۔ یعنی انہیں اَپ فرنٹ پر صرف ۳۱۴ء۲۵؍ روپے دینا ہو گا۔ اس کے بعد پچیس فیصد رقم مئی ۲۰۲۱ء  تک دینی ہو گی۔ بقیہ ۵۰؍ فیصد رقم فیصد نومبر۲۰۲۱ء  تک دینے کا وقت رہے گا۔ارب پتی کاروباری مکیش امبانی کی کمپنی ریلائنس انڈسٹریز نے ۳۰؍ اپریل کو ہر ایک۱۵؍ شیئرز کے لئے ایک رائٹ ایشو شیئر جاری کر  کے۵۳؍ ہزار ۱۲۵؍ کروڑ روپے جٹانے کے منصوبے کا اعلان کیا ہے۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK