ایشیا کپ : افتتاحی میچ میں سری لنکا اور افغانستان کی ٹکر

Updated: August 27, 2022, 12:45 PM IST | Agency | Dubai

دونوں کے درمیان برابری کا مقابلہ متوقع۔ لنکا کی جانب سے ہسرنگا اسپن گیندبازی کی قیادت کریں گے۔ راشد خان بھی میچ کیلئے تیار

Picture .Picture:INN
علامتی تصویر ۔ تصویر:آئی این این

 ایشیا کپ۲۰۲۲ء سنیچر سے شروع  ہورہا ہے اور پہلا میچ  سری لنکا  اور افغانستان کے مابین ہو گا۔ دونوں ٹیمیں اس میچ کیلئے پوری طرح تیار ہیں۔  دونوں کے درمیان پہلا میچ دبئی کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلا جائے گا۔ ایک طرف سری لنکا کی ٹیم اس سال ٹی ۲۰؍ میں ایک بھی میچ جیتنے میں کامیاب نہیں ہو سکی ہے۔ اس کے ساتھ ہی افغانستان کی ٹیم حال ہی میں ختم ہونے والی آئرلینڈ کے خلاف ۵؍ میچوں کی ٹی ۲۰؍ سیریز  ہار چکی ہے۔ ایسے میں دونوں ٹیمیں ایشیا کپ کا پہلا میچ جیتنے کے ارادے سے میدان پر اتریں گی۔
 دبئی کی پچ پر بلے باز اور گیند باز دونوں ہی مدد حاصل کر سکتے ہیں  تاہم یہاں کی پچ تھوڑی سست ہوسکتی ہے جس سے اسپنرس کو فائدہ ہوگا۔ اس گراؤنڈ پر ٹی ۲۰؍ کا اوسط اسکور۱۴۰؍ رن ہے۔ اب تک جہاں سری لنکا کی ٹیم ایشیا کپ میں ۵۴؍میچ کھیل چکی ہے اور۳۵؍ جیت چکی ہے، وہیں  افغانستان کی ٹیم نے۱۲؍ میچوں میں سے صرف۵؍میں کامیابی حاصل کی ہے۔اس کے ساتھ ساتھ دونوں ٹیمیں اس ٹورنامنٹ میں دو بار ایک دوسرے کے خلاف کھیل چکی ہیں۔ ۲۰۱۴ء میں سری لنکا کی ٹیم نے پہلے مقابلے میں فتح حاصل کی تھی جبکہ ۲۰۱۸ء کے ایشیا کپ میں افغانستان کی ٹیم دوسری بار جیتی تھی۔ دونوں ٹیمیں ایک ایک جیت کے ساتھ برابر نظرآرہی ہیں ۔
 سری لنکا کے آل راؤنڈر ہسرنگا نے اس سال کے آئی پی ایل۲۰۲۲ء میں آر سی بی کے لئے  شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔ وہ سیزن میں کھیلے جانےوالے۱۶؍ میچوں میں ۲۶؍وکٹ لے کر ٹاپ گیند بازوں میں سے ایک تھے۔ مہیش، جیفری وانڈرسے اور پروین جے وکرما جیسے ساتھی اسپنرس کے ساتھ ہسرنگا متحدہ عرب امارات میں گیندبازی کی قیادت کریں گے ۔ افغانستان کے آل راؤنڈر اسٹار  کھلاڑی راشد خان ایشیا کپ ۲۰۲۲ءمیں افغانستان کا سب سے بڑا ہتھیار ثابت ہوں گے۔ انہوں نے ۶۶؍ ٹی۲۰؍ انٹرنیشنل میچوں میں مجموعی طور پر۱۱۲؍ وکٹ حاصل کئے ہیں اور یہ اعداد شاندار ہیں۔ سری لنکا کی ٹیم :داسن شاناکا (کپتان)، دھنوشکا گناتیلکا، پاتھم نسانکا، کسل مینڈس، چریت اسلانکا، بھانوکا راجا پاکسا، اشین بندارا، دھننجے ڈی سلوا، وینندو ہسرنگا، مہیش تیکشانا، جیفری وانڈرسے، پروین جے وکرما، چمیکا کرونارتنے، دلشان مدوشنکا، متیشا پاتھیرانا، نوانیڈو فرنانڈو، نووان تشارا، دنیش چندیمل۔ افغانستان کی ٹیم: محمد نبی (کپتان)، نجیب اللہ زدران، افسر زازئی، عظمت اللہ عمرزئی، فرید احمد ملک، فضل الحق فاروقی، حشمت اللہ شاہدی، حضرت اللہ زازئی، ابراہیم زدران، کریم جنت، مجیب الرحمان، نجیب اللہ،نورالاحمد، رحمان اللہ گرباز، راشد خان، سمیع اللہ شنواری۔اس کے علاوہ ۳؍ کھلاڑیوں کو اسٹینڈ بائی پر رکھا گیا ہے۔ ان میں نجات مسعود، قیس احمد اور شرف الدین اشرف شامل ہیں۔ 

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK