میسی بارسلونا کے ساتھ۲۰۲۶ء تک رہیںگے

Updated: July 16, 2021, 1:41 PM IST | Agency | Madrid

خبروں کے مطابق اسٹار کھلاڑی۵؍سال کا معاہدہ کریںگے، تنخواہ میں ۵۰؍فیصد کٹوتی پر بھی راضی

Lionel Messi. Picture:INN
لیونل میسی۔تصویر :آئی این این

فٹبال کے سپر اسٹار لیونل میسی بارسلونا فٹبال کلب کے ساتھ جڑے رہ سکتے ہیں۔خبروں کے مطابق ارجنٹائنا کے اسٹار کھلاڑی آئندہ ۵؍برسوں کےلئے کلب کے ساتھ معاہدہ کرسکتے ہیں اور اس کیلئے انہوںنے اپنی تنخواہ میں ۵۰؍فیصد کٹوتی کرنے پر بھی رضا مندی ظاہر کی ہے۔بارسلونا کیلئے سب سے زیادہ گول کرنے والے کھلاڑی میسی کا کلب کے ساتھ گزشتہ ماہ کانٹریکٹ ختم ہوگیا تھا اور وہ کسی بھی کلب میں جانے کیلئے آزاد تھے۔جب سے  جوآن لاپورتو نے بارسلونا کے صدر کا عہدہ سنبھالا ہے تب سے ہی ان کی کوشش تھی کہ میسی کو کلب کے ساتھ جوڑے رکھیں اور تنخواہ کم کرنے پر انہیں راضی کریں۔ دریں اثنا خبروں میں یہ بھی دعویٰ کیا گیا ہے کہ لیونل میسی اپنی تنخواہ میں ۵۰؍فیصد کی کمی کرنےکیلئے تیار ہوگئے ہیں اور کلب آئندہ ہفتے ان کے ساتھ نئے معاہدے کا اعلان کرسکتا ہے۔یاد رہے کہ ۲۰۱۴ء میں بارسلونا کے ساتھ معاہدہ کرنے والے میسی اب تک کلب کے ساتھ ہی جڑے تھے ۔ان کا معاہدہ گزشتہ ماہ جون میں ختم ہوگیا تھا اور وہ کسی دوسرے کلب میں جانے کیلئےآزاد تھے۔پیرس سینٹ جرمین اور مانچسٹرسٹی کے ساتھ ساتھ انٹر میلان کے کلب میسی کو اپنی ٹیم میں شامل کرنے کیلئے کوشاں تھے۔اب اگر لیونل میسی بارسلونا کے ساتھ ۵؍سال کا معاہدہ کرلیتے ہیں تو وہ ۳۹؍ سال کی عمر تک اسی کلب سے جڑے رہیںگے۔ معاہدہ کا باضابطہ اعلان ہوجاتا ہے تو لیونل میسی بارسلونا کے ساتھ ۲۰۲۶ء تک رہیںگے۔حال ہی میں کوپا امریکہ ٹرافی جیت کر میسی نے کوئی پہلا بین الاقوامی خطاب اپنے نام کیا تھا۔ ارجنٹائنا کی جیت کے بعد لیونل میسی اپنے اہل خانہ کے ساتھ چھٹیاں منانے چلے گئے ہیں اور آئندہ ہفتے  لوٹیں گے۔واضح رہے کہ لیونل میسی نے بارسلونا کیلئے اب تک ۶۷۲؍ گول کئے ہیں جبکہ انہوں نے کلب کیلئے ۱۰؍ لا لیگا، ۴؍ چمپئن لیگ اور ۷؍ مرتبہ کنگز کپ خطاب جیتا ہے۔ اس کےعلاوہ انہوں نے ۶؍مرتبہ’ بیلون ڈی اور‘ اعزاز حاصل کیا ہے۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK