شیفالی ورما ہندوستان کی جانب سے یکروزہ کریئر کے آغاز کیلئے بے قرار

Updated: June 27, 2021, 9:00 AM IST | Bristol

آج سے ہندوستان اور انگلینڈ کی خواتین ٹیم کے درمیان یکروزہ سیریزکاآغاز۔ شیفالی ورما زبردست فارم میں کھیل رہی ہیں

Women`s team India`s star batsman Shafali Verma.picture:PTI
خواتین ٹیم انڈیا کی اسٹار بلےباز شیفالی ورما تصویرپی ٹی آئی

:ہندوستانی خواتین کی کرکٹ ٹیم اس وقت انگلینڈ کے دورے پر ہے ، جہاں حال ہی میں ٹیم نے میزبان ٹیم کے خلاف واحد ٹیسٹ میچ کھیلا ہے۔ ۷؍ سال بعد اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والی ہندوستانی ٹیم نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کیا اور ٹیسٹ میچ ڈرا کروا دیا اور اب ٹیم کی نظر محدود اوورس کی سیریز میں بھی اسی کارکردگی کو دُہرانے پر ہے۔ ہندوستانی خواتین کی ٹیم اتوار کو یہاں شروع ہونے والی ۳؍ ایک روزہ میچوں کی سیریز کے پہلے میچ میں مضبوط عالمی چمپئن انگلینڈکیخلاف سنسنی خیز  مظاہرہ کرتی نظر آئے گی۔
 شیفالی نے اب تک۲۲؍ ٹی ۲۰؍ انٹرنیشنل میچ کھیلے  ہیں اور اس ۱۷؍ سالہ بلے باز نے اپنی کارکردگی سے عالمی کرکٹ کو متوجہ کیا ہے لیکن شیفالی کو آخری ہوم سیریز میں جنوبی افریقہ کی ویمن ٹیم کے خلاف منتخب نہیں کیا گیا تھا جس میں ہندوستان کو ایک ذلت آمیز شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ ٹیم اس سیریز میں عمدہ کارکردگی کیساتھ اس پچھلی سیریز کی ہار کی تلافی کرنا چاہے گی۔
 ہندوستانی ٹیم جنوبی افریقہ سےایک۔۴؍  سے ہار گئی تھی اور اس سیریز میں شیفالی کو باہر کرنے پر کافی ہنگامہ آرائی ہوئی تھی۔ تاہم ، اب ٹیم مینجمنٹ اس طرح کی کوئی غلطی نہیں کرنا چاہے گا۔ شیفالی  نے گزشتہ ہفتے انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ میں ۹۶؍ اور۶۳؍ رن بنائے تھے۔ ان کی دھماکہ خیز بیٹنگ یقیناً ہندوستانی ٹیم کے لئے بہت اہم ہے۔ نائب کپتان ہرمنپریت کور کے علاوہ ، ٹیم میں کوئی متاثر کن کھلاڑی نہیں ہےاور وہ بھی فارم میں نہیں ہیں۔
   پونم راوت ، کپتان میتھالی راج کے ساتھ ٹاپ آرڈر میں ہیں ، شیفالی اگر فارم میں ہیں تو بیٹنگ میں بہت فرق پیدا کرسکتی ہیں۔ شیفالی نے جس طرح سے ٹیسٹ میں آنیا شربسول ، کیتھرین برونٹ ، کیٹ کراؤس ، نیٹ سائنسور اور سوفی ایکل اسٹون کا مقابلہ کیا ،   اسے دیکھتے ہوئے گھریلو ٹیم کے کوچنگ عملے کو اس ہریانوی طوفان کو روکنے کی منصوبہ بندی کرنی ہوگی۔ اگر اسمرتی مندھانا اور شیفالی اننگز کا آغاز کرتی ہیں تو اندرا کو اپنے موقع کا انتظار کرنا پڑے گا کیوں کہ پونم راوت اپنی عمدہ کارکردگی اور قدرے بہتر اسٹرائیک ریٹ کے بعد تیسرے نمبر پر بیٹنگ کرنا چاہیں گی ، اس کے بعد کپتان اور نائب کپتان چوتھے   اور۵؍ویں نمبرپرہیں۔ 
 آل راؤنڈر دپتی شرما چھٹے نمبر پر رہیں گی اور اگر تانیہ بھاٹیا اور اندرانی کے درمیان فیصلہ کیا گیا تو انگلینڈکے خلاف دوسری اننگز میں تانیہ اپنی کارکردگی سے مضبوط دعویدار ہوںگی۔  ۴؍گیندبازوں میں جھولن گوسوامی کو  منتخب کیا جانا لازمی ہے اور شکھا پانڈے ، پوجا وسترکر اور اروندھتی ریڈی میں سے کسی ۲؍کومنتخب کیا جائے گا۔ ہندوستانی ٹیم نے دیکھا ہے کہ کس طرح ایکل اسٹون نے   ٹیسٹ میچ کے دوران اپنی `وکٹ ٹو وکٹ  اسپن بولنگ سے پریشان کیا   لہٰذا ایکتا بشٹ یا رادھا یادو کو ترجیح دی جاسکتی ہے جو بولنگ کرنے کی ایک جیسی صلاحیت رکھتی ہیں۔ اگر ہندوستان تیسرا اسپنر میدان میں اتارنے کا فیصلہ کرتا ہے تو اپنی بیٹنگ کی طاقت اور متاثر کن آف بریک بولنگ کے ساتھ اسنیہ رانا لیگ اسپنر پونم یادو سے مقابلہ کرسکتی ہیں۔ 

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK