• Wed, 28 February, 2024
  • EPAPER

Inquilab Logo

اینیمل: والد کا انتقام لینے کیلئے جانور بن جانے والےنوجوان کی کہانی

Updated: December 02, 2023, 9:50 AM IST | Mohammed Habib | Mumbai

تشدد سے بھرپور اس فلم میں رنبیر کپور نے اپنےکریئر کی بہترین اداکاری کامظاہرہ کیا ہے،دیگر اداکاروںنےبھی عمدہ اداکاری کی ہے۔

Ranbir Kapoor and Dir actor can be seen in a scene from the movie `Animal`. Photo: INN
فلم ’اینیمل‘ کے ایک منظر میں رنبیر کپور اور دیر اداکار دیکھے جاسکتے ہیں۔ تصویر : آئی این این

اینیمل (Animal)
اسٹار کاسٹ:رنبیر کپور، انیل کپور، بابی دیول، رشمیکا مندانا، ترپتی ڈمری، ببلو پرتھویراج، پریم چوپڑہ،سریش اوبیرائے۔
ہدایتکار:سندیپ ریڈی وانگا
 کہانی:سندیپ ریڈی وانگا
پروڈیوسر:بھوشن کمار، کرن کمار، مراد کھیتانی، پرنے ریڈی وانگا
سنیماٹوگرافی: امیت رائے 
ایڈیٹنگ: سندیپ ریڈی وانگا
موسیقی:منن بھاردواج، پریتم چکرورتی، شریاس پرانک، ہرشوردھن رامیشور
 سنیماٹوگرافی:سنتنا کرشنن، روی چندر امیت رائے
ایڈیٹنگ:سندیپ ریڈی وانگا
 پروڈکشن ڈیزائن:سریش سیلواراجن
 ریٹنگ: ***
 آج سے تقریباً۱۰؍سال قبل انوراگ کشیپ کی ’گینگز آف واسع پور‘کو ہندوستانی سنیما کی سب سے پرتشدد فلم قرار دیا گیا تھا۔ لیکن ہدایت کار سندیپ ریڈی وانگاکی یکم دسمبرکوریلیز ہونے والی فلم نےخونریزی کے معاملے میں ’گینگزآف واسع پور‘کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔’کبیر سنگھ‘ سے شہرت حاصل کرنے والےسندیپ ریڈی وانگا نےٹریلر لانچ کے موقع پرہی کہا تھا کہ یہ اب تک کی سب سے پرتشددفلم ہوگی۔ فلم میں تشدد کے علاوہ اور بھی بہت سے عناصر ہیں اور وہ ہےرنبیر کپور کی شانداراداکاری،جو فلم کے ٹائٹل کے مطابق ہر طرح سے اینیمل انسٹنٹکٹ کو مجسم کرتی نظر آتی ہے۔ ایسا کردار جو اپنےباپ کی عزت اور جان کی خاطر مہذب معاشرے کے تمام اصول و ضوابط توڑ کر جانوربن جاتا ہے۔ یہاں یہ بتانا بھی ضروری ہے کہ یہ فلم کمزور دل والوں کو پسند نہیں آئے گی۔
`کہانی:تقریباًساڑھے تین گھنٹے طویل اس فلم کی کہانی بوڑھےرنبیر کپور سے شروع ہوتی ہےجہاں سے کہانی فلیش بیک میں جاتی ہے۔اسکول جانے والا وجے اپنے ارب پتی بزنس مین والدبلبیرسنگھ (انیل کپور)کو نہ صرف آئیڈیل مانتا ہے بلکہ ان سےجنون کی حد تک پیارکرتا ہے۔ اپنے والد کو سالگرہ کی مبارکباد دینےکیلئےنہ صرف ٹیچرسےمارکھاتاہےبلکہ اسکول سےبھاگ کر گھربھی آجاتاہے۔لیکن بلبیر،جو اپنے کاروبار میں دن رات مصروف رہتاہے،اپنےبیٹےکو وہ پیار اور وقت دینے سے قاصر ہے جس کی وجے خواہش رکھتا ہے۔
 نوجوان سائیکو وجے(رنبیرکپور)کا ایک ہی مقصد ہے،کسی طرح اپنے والدکی توجہ حاصل کرنااور انہیں متاثرکرنا۔لیکن اس کےپرتشدد رجحانات اور حرکات اسے اپنے والد سے دور رکھتے ہیں ۔ایک دن، اسکول جانے والاوجے، اپنی کالج جانے والی بہن کےساتھ، ریگنگ کرنے والوں کو سبق سکھانے کیلئےمشین گن سے فائرنگ کرتا ہے۔ پھر بلبیر سنگھ اسے نظم و ضبط کے لیے ہاسٹل بھیج دیتےہیں۔وجے کو احساس ہے کہ اس کی غیر موجودگی میں اس کےبہنوئی نے اس کے والد کی کاروبارپرقبضہ کر لیا ہے۔ وہ اپنے بہنوئی کےساتھ بھی بدتمیزی کرتا ہے اور اس وقت بلبیر سنگھ کواحساس ہوتا ہے کہ ہاسٹل سے آنے کے بعد بھی وجے میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔
یہاں وجے، جو اپنے آپ کو الفا میل (گروپ کا سب سے طاقتور مرد)کہتاہے، پہلی نظر میں گیتانجلی (رشمیکا مندانا)سے پیارکر بیٹھتاہے۔ پھر وہ گیتانجلی کی منگنی تڑوا دیتا ہے اور اسے براہ راست شادی کی پیشکش کرتا ہے۔ وہ گیتانجلی کو اپنے والد اور خاندان سے ملانے کیلئے لاتا ہے، لیکن ایک بار پھر اسے اپنے والد کی بے حسی اور غصے کاسامنا کرنا پڑتا ہے۔ وہ گیتانجلی کے ساتھ امریکہ چلاجاتاہے۔ ۸؍سال بیرون ملک رہنے کے بعد وہ ایک دن وطن واپس آتا ہے جب اسے معلوم ہوتا ہے کہ اس کے والد کو گولی مار دی گئی ہے۔ اپنے والد کی وراثت کو برقرار رکھنے کے لیے پرعزم، وجے خود ۲؍بچوں کا باپ ہونے کے باوجود اپنے والد پرجان لیوا حملہ کرنے والوں کے خون کا پیاسا ہو گیا ہے۔ لیکن اس کے والد کا بدلہ لینے کا جذبہ اسے ایک جانور بنا دیتا ہے۔ کیا وجے اپنے والد پرحملہ کرنے والوں سے بدلہ لے سکے گا؟ کیا وہ مہذب معاشرے کاحصہ بن سکے گا؟ وجے کے اس پرتشدد رویے کی وجہ کیا ہے؟ یہ جاننے کیلئے آپ کو فلم دیکھنا پڑے گی۔
اداکاری:اداکاری کی بات کریں تو اسے رنبیر کپور کے کریئر کی بہترین پرفارمنس قرار دیا جائےتو غلط نہ ہوگا۔رنبیر کپور نےاس پرتشدد اور خطرناک کردار کے تمام پہلوئوں کو عمدگی سے ادا کیا ہے۔ قتل کے مناظر میں جہاں ان کی بربریت جھلکتی ہے وہیں رومانوی مناظر میں وہ رومانی اندازمیں نظرآتے ہیں لیکن سب سے زیادہ متاثر کن مناظر باپ بیٹےکے درمیان ہوتےہیں۔ کلائمکس میں باپ اور بیٹے کے درمیان کا منظر قطعی مختلف ہے۔ اپنی اداکاری سے وہ سامعین کو دنگ کردیتے ہیں۔
نتیجہ:یہ فلم وہ لوگ دیکھ سکتے ہیں جو ایکشن فلموں اور رنبیر کپور کی اداکاری کے شوقین ہیں۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK