مودی کے قلعہ میں سیندھ لگانے کی کوشش، اکھلیش کی مدد کیلئے ممتا بھی بنارس پہنچیں

Updated: March 04, 2022, 11:14 AM IST | Jeelani Khan Aleg/Noorul Hussain Khan | Lucknow/Banaras

سماجوادی اور اس کی اتحادیوں نے طاقت دکھائی،بیشتر بڑے لیڈران موجود، جینت اورراج بھر کا بھی بی جے پی ، یوگی اور مودی پرشدید حملہ،واضح اکثریت کےساتھ حکومت بنانے کادعویٰ

Jayant Chaudhary, Akhilesh Yadav, Ram Gopal Yadav, Mamata Banerjee and Krishna Patel along with other leaders.Picture:PTI
جینت چودھری، اکھلیش یادو، رام گوپال یادو، ممتا بنرجی اور کرشنا پٹیل کے ساتھ دیگر لیڈران تصویر: پی ٹی آئی

:اسمبلی انتخابات کے چھٹے مرحلےکی  ووٹنگ کے دن پوروانچل کی راجدھانی کےطور پر مشہوراوروزیر اعظم مودی کے پارلیمانی حلقہ   بنارس کے قلعہ میں سیندھ لگانے کیلئے سماجوادی پارٹی اور اس کی اتحادی جماعتیں پہنچیں اوراپنی طاقت دکھائی۔اتحاد کے بیشتر لیڈروں کی موجودگی نے بنارس کاسیاسی درجہ حرارت ساتویں آسمان پر پہنچا دیا۔اسٹیج پر موجود ممتا بنرجی، اکھلیش یادو، اوپی راج بھر، جینت چودھری اور کرشنا پٹیل سمیت تمام اہم لیڈران  بی جے پی حکومت اور اس کی پالیسیوں پر جم کر تنقید کی۔ان لیڈروں نے مرکزی اور ریاستی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے عوام کو متنبہ کیا کہ ان کی چالبازیوں ، بیان بازیوں اور جھوٹے وعدوں کے جال میں پھر سے نہ پھنسیں۔ ان لیڈروں نے بی جے پی کی اقتدار سے بے دخلی اورواضح اکثریت کے ساتھ اگلی حکومت بنانے کا بھی دعویٰ کیا۔ جمعرات کو رنگ روڈکے نزدیک ایڑھے گائوں میں سماجوادی اور اس کی اتحادی پارٹیوں کے لیڈران کیلئے سجائےگئے اسٹیج پران پارٹیوں کے بیشتر اہم لیڈران جلوہ افروز تھے۔ان میں بنگال کی وزیرا علیٰ اور ترنمول کانگریس سربراہ ممتا بنرجی، ایس پی چیف اور سابق وزیرا علیٰ اکھلیش یادو،آرا یل ڈی کے قومی صدر جینت چودھری، سہیل دیو بھارتیہ سماج پارٹی کے بانی اوم پرکاش راج بھر،اپنا دل (کے)کی سربراہ کرشنا پٹیل،ایس پی قومی جنرل سیکریٹری رام گوپال یادو،پرگتی شیل سماجوادی پارٹی کے سربراہ شیوپال یادوجیسےلیڈران کے نام قابل ذکر ہیں۔مجمع اور اس کا جوش و خروش دیکھ کر یہ لیڈران کافی خوش نظر آرہے تھے۔اس موقع پر جس کسی نے بھی خطاب کیا بی جے پی، مودی اور یوگی کو بطور خاص نشانہ بنایا۔   ممتا بنر جی نےیوپی میں ’کھیلا ہوبے ‘کا نعرہ بلند کرتے ہوئے کہا کہ یوگی کچھ نہیں کریں گے، اکھلیش میرا چھوٹا بھائی ہے، اس کو کامیاب بنائیں۔ممتا نے بدھ کی شام اپنے ساتھ بی جے پی کارکنان کی حرکت کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا کہ ان کی بے چینی سے ظاہر ہے کہ یوپی میں کھیلا ہوگیا اوراکھلیش کی قیادت میں حکومت سازی یقینی ہے۔ انہوں نے بی جے پی کو للکارتے ہوئے کہا کہ وہ شیرنی ہیں، کبھی ڈری ہیں نہ ڈریں گی۔ لاٹھی، ڈنڈے اور گالی گلوج ان کے حوصلے کبھی نہیں توڑ پائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ جو پارٹی ایک خاتون کی عزت نہیں کرتی،اس پارٹی کےا صول و نظریات پر کیا تبصرہ کریں۔ انہوںنے کہاکہ میرے ساتھ جو بھی ہوا، وہ ثابت کرتا ہے کہیوگی سرکار میں بہن بیٹیوں کی عزت محفوظ نہیں ہے۔ اسلئے مجھے امید ہے کہ ریاست کی ماں، بہنیں اور بیٹیاں میری اس بے عزتی کا بدلہ بی جے پی کو اقتدار سے بے دخل کرکے لیں گی۔  انہوں نے سامعین کو لکھیم پوری کھیری کا واقعہ بھی یاد دلایا۔  ریلی میں بھیڑ دیکھ کر پرجوش اکھلیش یادو نے یوگی کانام لئے بغیر ان پر تنقید کرتے ہوئے کہاکہ گرمی نکالنے والے ٹھنڈے پڑچکے ہیں اور یہاں کے لوگ اب ان کا دھواں نکالنے والے ہیں۔ انہوں نےکہا کہ آخری مرحلے میں ووٹ پڑتے ہی بی جے پی کا صفایا طےہوجائے گا۔ مودی پر حملہ کرتے ہوئے  اکھلیش نے ریزرویشن کارڈ بھی کھیلا اورکہا کہ مودی ریلوے اسٹیشن، جہاز،بندرگاہ، ایئرپورٹ، سرکاری کمپنیاں سب فروخت کررہے ہیں تاکہ نوکری رہے نہ ریزرویشن دینا پڑے۔  علاقہ میں کافی مقبول او پی راج بھر  نے بھی بی جے پی پر جم کر تنقید کی۔ انہوں نے اسے ’بڑی جھوٹی پارٹی‘ قرار دیا۔ اس موقع پر جینت چودھری نے بی جے پی کو مداری قرار دیتے ہوئے عوام سے اپیل کی ان سے ملک و قوم کو چھٹکارا صرف آپ ہی لوگ دلا سکتے ہیں۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK