دھاراوی پرمبنی کہانیوں کی ویب سیریز میں سنیل شیٹی اور وویک اوبیرائےنظر آئیں گے

Updated: July 06, 2022, 2:20 PM IST | Agency | Mumbai

دھاراوی خوابوں کے شہر ممبئی کا وہ علاقہ جہاں ایشیا کی سب سے بڑی جھوپڑ پٹی موجود ہے۔

Vivek Oberoi will look something like this in Dharavi Bank.Picture:INN
دھاراوی بینک‘ میں وویک اوبیرائے کچھ اس انداز میں نظر آئیں گے۔ تصویر: آئی این این

 دھاراوی خوابوں کے شہر ممبئی کا وہ علاقہ جہاں ایشیا کی سب سے بڑی جھوپڑ پٹی موجود ہے۔ ان جھوپڑوں میں ۴؍لاکھ سے زیادہ لوگ رہتے ہیں۔ یعنی ۴؍لاکھ خواب،۴؍لاکھ امیدیں، ۴؍لاکھ محبت کی کہانیاں، ۴؍لاکھ نفرتیں، اور شاید اتنی ہی دشمنیاں۔ سوچیں ان جھوپڑ پٹیوںکی گلیوں میں کتنا کچھ ہوتا ہوگا۔ یہاں پیار کی عبارتیں لکھی جاتی ہونگی۔ نفرت تلوار کھینچی جاتی ہوگی۔کوئی ان جھوپڑوں سے اگے بڑھ کر آسمان چھوناچاہتا ہوگا تو کوئی جرائم کی دلدل میں دھنس رہا ہو گا۔سنیل شیٹی اور وویک اوبیرائے  دھاراوی کی جھوپڑ پٹی سےپیدا ہونے والی ایسی ان کہی کہانیوںکے ساتھ آرہےہیں۔ان کے ساتھ خوبصورت سونالی کلکرنی  بھی نظرآئیںگی۔ اس نئی ویب سیریز کا نام ’دھاراوی بینک‘ ہے، جو جلد ہی ایم ایکس پلیئر پر نشر کی جائے گی۔ ’آشرم‘، ’بھؤکال‘اور’رکتانچل‘جیسی ویب سیریز کےبعد، ایم ایکس پلیئراب ایشیا کی سب سے بڑی جھوپڑ پٹی کی ان کہی کہانیاں لےکر آرہاہے۔کرائم اور تھریلر پر مبنی اس سیریز میں انّایعنی سنیل شیٹی کے مداحوں کو ان کا وہ انداز دیکھنے کو ملے گا، جو اب تک اسکرین پر نہیں دکھایاگیا۔ اس کے ساتھ وویک اوبیرائے  بھی ایک مضبوط کردار میں نظر آئیں گے۔اداکارہ سونالی کلکرنی بھی اپنی زبردست اداکاری سےدلوں پر چھا جانےوالی ہیں۔اس کی زیادہ تر شوٹنگ دھاراوی کے میں ہی کی گئی ہے۔ اصلی جگہ پر آباد جھونپڑیوں کی شوٹنگ کی گئی ہے۔  جرائم اور اسرار سے بھرپور اس ویب سیریزکو سمت ککڑنےڈائریکٹ کیا ہے۔ ’دھاروی بینک‘ کے بارے میں بات کرتے ہوئے  ایم ایکس پلیئر کےچیف کنٹینٹ آفیسرگوتم تلوارکہتے ہیں، ’’دھاراوی بینک جرم، سنسنی خیز اور انتقام کی ایک ایسی کہانی ہےجو آپ کو آخرتک باندھ کررکھےگی۔آپ کبھی اندازہ نہیں لگا سکیں گے کہ اگلے لمحے کیا ہونے والاہے۔ ہم نے ایک بہترین ماحول بنایا ہےجو ہماری کہانی سےملتا ہے اور اس کے لیے ہم سب نے بہت محنت کی ہے۔‘‘

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK