یہ عادتیں اپنائیں اور بیماری کو دوری بھگائیں

Updated: December 14, 2020, 12:56 PM IST | Inquilab Desk

اچھی صحت کے لئے صرف غذا ہی ضروری نہیں ہے آپ کا غلط رہن سہن بھی آپ کی صحت کو متاثر کرتا ہے۔ اس لئے صحت بخش غذا کے ساتھ اچھی عادتیں اپنانا بھی انتہائی ضروری ہے تاکہ بار بار بیمار پڑنے سے چھٹکارا حاصل کرسکیں اور ہمیشہ ہشاش بشاش نظر آئیں

Healthy Food - PIC : INN
صحت غذا بخش ۔ تصویر : آئی این این

آپ نے اکثر غور کیا ہوگا کہ  آپ کے آس پاس موجود کچھ لوگ اکثر بیمار رہتے ہیں جبکہ بعض افراد موسم کی سختی کو بآسانی برداشت کرلیتے ہیں اور ہمیشہ صحتمند اور تندرست نظر آتے ہیں۔
 اچھی صحت کیلئے صرف غذا ہی ضروری نہیں ہے آپ کا غلط رہن سہن بھی آپ کی صحت کو متاثر کرتا ہے۔ اس لئے صحت بخش غذا کے ساتھ اچھی عادتیں اپنانا بھی انتہائی ضروری ہے تاکہ بار بار بیمار پڑنے سے چھٹکارا حاصل کرسکیں اور ہمیشہ ہشاش بشاش نظر آئیں۔ یہاں صحتمند انسانوں کی چند عادات پیش کی جارہی ہیں جنہیں دیکھ کرکمزور قوت مدافعت کے حامل افراد بھی اپنی معمولات زندگی میں تبدیلی کرسکتے ہیں اور بار بار بیمار رہنے کی عادت سے پیچھا چھڑاسکتے ہیں:
مثبت سوچ اپنائیں
 بار بار بیمار رہنے کی ایک وجہ آپ کی سوچ بھی ہوسکتی ہے۔ اگر آپ اپنے دماغ میں یہ بات بٹھالیں کہ سرد و گرم موسم کے اثرات آپ پر اثر انداز ہورہے ہیں جس کی وجہ سے آپ کا مدافعتی نظام کمزور پڑرہا ہے تو آپ لازمی بیمار ہوں گے۔ اس کے برعکس آپ اگر موسم کی سختی کو اپنے اوپر حاوی نہ ہونے دیں اور بیماری کے متعلق زیادہ نہ سوچیں تو آپ دیکھیں گے کہ آپ کی صحت پر اس کے مثبت اثرات مرتب ہونا شروع ہوگئے ہیں۔
خوب پانی پئیں
 زیادہ سے زیادہ پانی پینےکی عادت کو اپنی زندگی میں اس طرح شامل کرلیں کہ اس کے بغیر آپ کو اپنی زندگی ادھوری محسوس ہونے لگے۔ کوشش کریں کہ دن میں کم از کم ۸؍ گلاس پانی پئیں۔ صحت مند زندگی میں پانی کی اہمیت کا اندازہ اس بات سے بھی لگایا جاسکتا ہے کہ ایک ۲۰؍ کلو وزن کے انسانی جسم کو ایک لیٹر پانی کی ضرورت ہوتی ہے لہٰذا اگر آپ کا وزن ۵۰؍ کلو گرام ہے تو آپ کو ڈھائی لیٹر پانی کی ضرورت ہے۔
وٹامن سی کا استعمال
 وٹامن سی کا استعمال انسانی صحت کے لئے بہت ضروری ہے کیونکہ یہ وٹامن مدافعتی نظام کو بڑھانے کے ساتھ جسم کو طاقت بھی فراہم کرتی ہے۔ وٹامن سی حاصل کرنے کا سب سے بہترین ذریعہ ترش پھل جیسے لیموں، کینو، مالٹا وغیرہ ہیں جبکہ دھوپ سے بھی وٹامن سی حاصل کی جاسکتی ہے۔
بھرپورنیند
 اگر کوئی انسان بے خوابی کا شکار ہے اور جلدی لیٹنے کے باوجود اسے نیند نہیں آتی تو اس کامطلب ہے کہ اس کا مدافعتی نظام بے حد کمزور ہے کیونکہ نیند کا براہ راست تعلق مدافعتی نظام سے ہوتا ہے لہٰذا کوشش کریں کہ بھرپور نیند لیں اور صبح تازہ دم اٹھیں۔
حفظان صحت اور مناسب صفائی
 کوشش کریں کہ اپنے آس پاس کی جگہ خاص طور پر فرش، دروازے، لائٹ، سوئچ بٹن، ریموٹ اور ٹوائلٹ وغیرہ کی صفائی کا بے حد خیال رکھیں کیونکہ گھر میں اگر ایک انسان بیمار ہوگا اور وہ ان تمام چیزوں کو ہاتھ لگائے گا تو اس کے جراثیم گھر کے دیگر افراد میں منتقل ہوجائیں گے جس کی وجہ سے دیگر لوگوں کے بیمار ہونے کا خطرہ بڑھ جائےگا۔
احتیاطی تدابیر
 سرد موسم کی شروعات ہوتے ہی نزلے اور زکام کے جراثیم انسانوں پر حملہ آور ہوتے ہیں جس کے باعث انسان بیمار ہوجاتے ہیں اور اپنے آس پاس کے لوگوں کو بھی بیمار کرتے ہیں لہٰذا ان جراثیم سے بچنے کا بہتر طریقہ یہ ہے کہ موسم کی تبدیلی کے ساتھ ہی نزلے اور زکام سے بچاؤ کی ویکسین لے لیں اس طرح آپ کا مدافعتی نظام بیمار کرنے والے جراثیم سے لڑنے کے لئے تیار ہوجائے گا۔
ہاتھوں کو دھونے کی عادت اپنائیں
 ہاتھ دھونے کی عادت ہمیں بچپن سے سیکھائی جاتی ہے۔ یہ عادت حفظان صحت کے اصولوں کے معیار پر پوری اترتی ہے۔ کھانا کھانے سے پہلے اوربعد میں، اس کے علاوہ ٹوائلٹ سے باہر آنے کے بعد بھی لازمی ہاتھ دھونے کی عادت اپنائیں۔
ہری سبزیوں کا استعمال
 گوشت کے ساتھ ساتھ اپنی خوراک میں ہری سبزیوں کا استعمال بڑھادیں۔ ہری سبزیاں اینٹی آکسیڈنٹ حاصل کرنے کا بہترین ذریعہ ہوتی ہیں جب کہ ان میں بہت سارے وٹامن بھی پائے جاتے ہیں جو مدافعتی نظام کو طاقتور بناکر جسم کو جراثیم کے خلاف لڑنے کے تیار کرتے ہیں۔
ورزش کرنے کی عادت
روزانہ ورزش کرنے کو اپنا معمول بنالیں ۔ورزش کرنے سے انسانی صحت پر مثبت نتائج برآمد ہوتے ہیں اور انسان تازہ دم اور چست ہوجاتا ہے۔
غیر معیاری غذا سے اجتناب
 عموماً نوجوان تیل میں تلی ہوئی چیزیں جنہیں ’اسنیکس‘کہاجاتا ہے بہت شوق سے کھاتے ہیں جب میں چپس وغیرہ شامل ہیں۔ تاہم یہ چیزیں وزن میں اضافے کا باعث بنتی ہیں جبکہ انہیں کھانے سے گلے کے مسائل بھی پیدا ہوجاتے ہیں۔ اگر بہت شوق ہیں تو اعتدال میں کھائیں۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK