Inquilab Logo

اپنے لئے وقت کیسے نکالیں؟ اور اسے کیسے صرف کریں؟

Updated: June 01, 2023, 1:14 PM IST | Saima Shaikh | Mumbai

گزشتہ ہفتے مذکورہ بالا عنوان دیتے ہوئے ہم نے ’’اوڑھنی‘‘ کی قارئین سے گزارش کی تھی کہ اِس موضوع پر اظہارِ خیال فرمائیں۔ باعث مسرت ہے کہ ہمیں کئی خواتین کی تحریریں موصول ہوئیں۔ ان میں سے چند حاضر خدمت ہیں

Take at least an hour every day for yourself, during which time read a book that will bring out your personality.
روزانہ کم از کم ایک گھنٹہ اپنے لئے نکالیں، اس دوران کسی ایسی کتاب کا مطالعہ کریں جس سے آپ کی شخصیت نکھر جائے۔

صبح ہی سے آغاز کیجئے


ہر وہ کام جس کا ہم دل سے عہد کر لیں ہمارے لئے مشکل نہیں رہ جاتا ہے۔ وقت نکالنے کے لئے سب سے پہلے ہم کو وقت کا پابند ہونا پڑے گا۔ اگر سب کام ہم وقت پر کر لیں تو وقت نکا لنا کچھ بھی مشکل نہیں ہوگا۔ یہ بات خود آزمائی ہوئی ہے کہ صبح کی نماز کے بعد دوبارہ اگر لیٹ جاتے ہیں تو سارے کاموں میں تاخیر ہو جاتی ہے، اور اگر صبح ہی سے ہر کام وقت پر کر لیا جائے تو ہم بآسانی اپنے لئے وقت نکال سکتے ہیں۔ ایک اور اہم چیز کہ جب ہم خود اپنے وقت کی قدر کریں گے تبھی دوسرا بھی کرے گا۔
 مجھے سب کے ساتھ وقت گزارنا بہت اچھا لگتا ہے۔ کوشش کرتی ہوں کہ یہ وقت سب کے ساتھ اچھی باتوں میں گزرے۔ کسی کو کچھ نصیحت دوں جو اس کے کام آئے يا کسی کی نصیحت لوں جو میرے کام آسکے۔
فرح حیدر (اندرا نگر، لکھنؤ)
شاپنگ کا پروگرام بنائیں


اپنے روزمرہ کے کاموں کو جلدی نمٹا کر ہم‌اپنے لئے وقت نکال سکتے ہیں۔ ہفتہ کے دن ہی سبزیاں صاف کر کاٹ کر فریج میں رکھ دیں۔ گوشت مچھلی بھی صاف دھو کر چھوٹے چھوٹے ضرورت کے لحاظ سے پیکٹ بنا لیں تو ہمارا کافی وقت بچے گا، صرف ایک ہی دن محنت کرنی پڑے گی۔ اب جو وقت ان کاموں میں صرف ہوتا تھا وہ ہمارا ذاتی ہو گا۔
 فارغ اوقات میں کوئی اچھی سی کتابیں پڑھیں، کچھ لکھیں۔ بیوٹی پارلر سے اپنی گرومنگ کروائیں۔ شاپنگ کا پروگرام بنائیں (ونڈو شاپنگ)۔ اپنے شوہر کے ساتھ کوالیٹی ٹائم گزاریں۔ اپنی سہیلی کے ساتھ باہر جائیں۔ شام کی چائے اطمینان سے پئیں، اس سے ذہن پر اچھا تاثر پڑے گا۔ فارغ وقت میں مجھے اپنے نواسے کے ساتھ کھیلنا بہت پسند ہے۔
رضوانہ رشید انصاری (امبرناتھ، تھانے)
چہل قدمی کریں


عورتوں کا پورا دن مصروفیت میں اور کام کاج میں نکل جاتا ہے وہ خود کیلئے وقت نہیں نکال پاتیں لیکن یہ ضروری ہے کہ وہ اپنے لئے بھی وقت نکالیں اور اپنی پسندیدہ چیزیں کرنے میں اس وقت کا استعمال کریں۔ میں اپنی بات ہی کہتی ہوں، یہ میرا معمول ہے کہ صبح نماز سے فارغ ہوکر گھر سے باہر نکل کر کچھ دور چلتی ہوں۔ اگر آپ کے لئے ممکن ہوں تو گھاس پر چلیں تا کہ تھکان کم ہو اور آپ اچھا محسوس کریں۔ کچھ دوست بنائیں جن کے ساتھ آپ کو بات کرنا اچھا لگتا ہو اور آپ ان کے ساتھ کچھ سوچے سمجھے بغیر ساری باتیں کہہ سکیں۔ اپنے بچے کو خود اسکول چھوڑنے جائیں تاکہ آپ تھوڑا گھر سے باہر بھی نکلیں اور لوگوں سے مل پائیں۔ اپنے شوہر کے کام پر جانے کے بعد اپنا سارا کام جلد ختم کرکے آپ اپنے بچوں کے ساتھ وقت گزاریں۔
صدف الیاس شیخ (تلوجہ)
کارآمد مصروفیات میں صرف کریں


علی الصباح بیدار ہوکر عبادت کے ساتھ اپنے دن کی شروعات کرنا بہترین ہے کہ صبح کے وقت میں برکت ہوتی ہے۔ اپنے معمولات میں اہم کاموں کو فوقیت دیکر ہم وقت کے زیاں سے بچ سکتے ہیں۔ خانہ داری کے کام بھی مناسب ٹائم ٹیبل کے تحت انجام دینا وقت کی بچت کا ایک کارگر طریقہ ہے۔ سوشل میڈیا ہمارے وقت کا دشمن ہے، اس سے پرہیز کریں۔
 کوشش کرنی ہے کہ کافی مشقت کے بعد اپنے لئے بچایا ہوایہ قیمتی وقت پھر کسی بیکار مشغولیت کی نذر نہ ہو جائے، اس وقت کو ہم اپنی کسی پسندیدہ سرگرمی، ہنر، کچھ نیا سیکھنا، اضافی عبادات اور بہترین دینی ادبی کتابوں کے مطالعے جیسی نافع اور کارآمد مصروفیات میں صرف کرسکتے ہیں۔ کسی سماجی فلاحی وکام میں شریک ہونا بھی وقت کا بہتر استعمال ہے۔
خالدہ فوڈکر(جوگیشوری، ممبئی)

ٹائم مینجمنٹ کامیابی کی کلید ہے
وقت سے قیمتی کوئی چیز نہیں اور وقت سے طاقتور بھی کوئی چیز نہیں ہے اور وقت بہترین معالج بھی ہے۔ ہر آدمی کے پاس ۲۴؍ گھنٹے کا وقت ہوتا ہے۔ یہ اس بات پر منحصر ہے کہ وہ اپنے وقت کو کتنے عمدہ طریقے سے استعمال کرتا ہے۔ ٹائم مینجمنٹ پر انسان کی کامیابی اور ناکامی کا انحصار ہوتا ہے۔ ہر خاتون کا، ہر فرد کا اپنا اپنا معمول ہوتا ہے۔ اسی میں سے کچھ وقت نکالنا پڑتا ہے۔
 اس وقت کا استعمال میں بچوں کو پڑھانے میں، بیماروں کی عیادت کرنے میں، اپنے دوستوں سے ملاقات کرنے میں، دین کی مزید معلومات حاصل کرنے میں، قرآن کریم کا ترجمہ پڑھنے میں اور کوئی نئی ریسیپی سیکھنے میں استعمال کرتی ہوں۔
نجمہ طلعت (جمال پور، علی گڑھ)
اپنا شوق پورا کریں


ہم خواتین گھر کے کام اور ذمہ داریوں میں اتنی مصروف رہتی ہیں کہ ہم یہ بھول جاتی ہیں کہ یہ زندگی ہماری بھی ہے۔ ہمیں خود کو کچھ وقت دینا بہت ضروری ہے۔ روزمرہ کے کاموں سے فارغ ہو کر ایک گھنٹہ خود کو دیں۔ اس وقت ہم اپنے شوق اپنی خواہشات کو حد میں رہ کر انجام دے سکتی ہیں۔ ورزش کریں اور چاق و چوبند رہیں۔ ہم ہمیشہ گھر والوں کی پسند کو اہمیت دیتی ہیں کبھی خود کی پسند کی کوئی ڈش بھی بنائیں۔ ہر انسان میں کوئی نہ کوئی ہنر ہوتا ہے اسے پہچاننا اور اسے آگے بڑھانا ہماری ذمہ داری ہے۔
ہما انصاری ( مولوی گنج، لکھنؤ)
وہ مختصر وقت صرف آپ کا ہوگا
خود کو وقت دینا ذاتی شخصیت کی صحت کیلئے فائدہ مند ثابت ہوگا۔ اپنے معمولات کو مدنظر رکھتے ہوئے ایسا وقت تلاش کریں جس میں آپ فارغ ہوتی ہیں۔ وہ وقت چاہے کچھ منٹوں پرمبنی ہی کیوں نہ ہو، لیکن معمولات سے نکالا ہوا وہ مختصر وقت صرف آپ کا ہوگا جس میں آپ وہ کام کریں گی جو آپ کی دلی مسرت کا باعث بنے۔ مثلاً اگر آپ لکھنے میں دلچسپی رکھتی ہیں تو ان اوقات میں پین اور ڈائری پکڑ کر پرسکون کونے میں بیٹھ جائیں اور وہ لکھیں جو آپ لکھنا چاہتی ہیں۔ اگر کوئی آرٹ میں دلچسپی رکھتی ہیں تو وہ انٹرنیٹ کی مدد سے کچھ ایسی چیزیں تیار کرسکتی ہیں جنہیں استعمال میں بھی لایا جاسکتا ہے۔ مختصراً وہ دلچسپیاں جو ذمے داریوں کے سبب بھلا دی جاتی ہیں ان پر تھوڑی توجہ دی جائے۔
فاطمہ یوسف (نالاسوپارہ)
گھر والوں کے ساتھ وقت گزاریں
اپنے لئے وقت کیسے نکالیں؟ اگر یہ سوال آپ کے ذہن میں آتاہے تو صبح جلدی اٹھنے کی عادت ڈال لیں۔ شاید آپ کو میری یہ بات عجیب لگے لیکن یہی حقیقت ہے کہ صبح کا اٹھنا کامیابی کی ضمانت ہے۔ جب آپ صبح اٹھیں گی تو محسوس کریں گی کہ جو سکون اور اطمینان صبح نماز فجر کے وقت میں ہوتا ہے وہ باقی کے اوقات میں نہیں ہوتا۔ اس کے علاہ اپنے اسکرین ٹائم کو کم کریں۔ اگر ہم خود پر ذرا سا کنٹرول کرکے ضرورت کے مطابق موبائل کا استعمال کریں تو ہمارا بہت سا وقت ضائع ہونے سے بچ جائے گا۔ اپنے وقت کو اپنی مٹھی میں رکھے۔ خالی اوقات میںگھر والوں کو اپنا وقت دیں۔ کوئی مشغلہ اپنائیں۔ اپنے وقت کو انمول سمجھیں۔ وقت کی قدر کریں۔ دنیا آپ کی قدر کرے گی۔
ڈاکٹر ادیبہ شجاع الدین شیخ (مالونی، ملاڈ)
اپنی صحت پر توجہ دیتی ہوں