• Mon, 26 February, 2024
  • EPAPER

Inquilab Logo

ہندوستانی معیشت میں پہلی بار مینوفیکچرنگ برآمدات کو فروغ ملاہے:اشوینی ویشنو

Updated: December 08, 2023, 1:27 PM IST | Agency | New Delhi

مرکزی وزیر اشونی ویشنو نے جمعرات کو دعویٰ کیا کہ ہندوستان کی معیشت ایک تاریخی موڑ پر پہنچ گئی ہے جہاں مینوفیکچرنگ سیکٹر نے ایکسپورٹ مارکیٹ میں سروس سیکٹر کو پیچھے چھوڑ دیا ہے اور ہندوستان کی برآمدات جلد ہی ایک ٹریلین ڈالر کو چھو جائیں گی۔

Ashwini Vaishnaw. Photo: INN
اشوینی ویشنو۔ تصویر : آئی این این

مرکزی وزیر اشونی ویشنو نے جمعرات کو دعویٰ کیا کہ ہندوستان کی معیشت ایک تاریخی موڑ پر پہنچ گئی ہے جہاں مینوفیکچرنگ سیکٹر نے ایکسپورٹ مارکیٹ میں سروس سیکٹر کو پیچھے چھوڑ دیا ہے اور ہندوستان کی برآمدات جلد ہی ایک ٹریلین ڈالر کو چھو جائیں گی۔ انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ آج ہندوستان ہر سال ایک کروڑ۸۰؍ لاکھ نئے روزگار کے مواقع پیدا کر رہا ہے۔ وشنو نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں یہ اطلاعات شیئر کیں۔ 
 اشوینی ویشنو نے کہا کہ ملک کی معیشت ایک تاریخی موڑ پر پہنچ گئی ہے۔ ملک میں مینوفیکچرنگ سیکٹر کو فروغ دینے کی بات کافی عرصے سے ہو رہی تھی لیکن ایسا نہ ہو سکا۔ پچھلے۴۰؍ سے۵۰؍ برسوں کے دوران ہندوستان میں مینوفیکچرنگ مسلسل گرتی رہی اور ہم اس کی صلاحیت سے فائدہ نہیں اٹھا سکے۔ انہوں نے کہا کہ آج ہم ایسی صورتحال پر پہنچ چکے ہیں جب ہماری برآمدات ایک ٹریلین ڈالر تک پہنچنے والی ہیں اور جلد ہی ہم اس سطح کو عبور کر لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ مالی سال ۲۳۔۲۰۲۲ء میں ہندوستانی برآمدات۷ء۶۲؍ کھرب ڈالر سے زیادہ تھیں ۔ اس میں سے مینوفیکچرنگ کی برآمدات۴ء۵۳؍ ٹریلین ڈالر اور سروس سیکٹر کی برآمدات ۳ء۰۹؍ کھرب ڈالر رہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ پہلے ہم صرف تین چار اشیاء برآمد کرتے تھے۔ اب برآمدی اشیاء کی فہرست بھی طویل ہوتی جا رہی ہے۔ گزشتہ سال سب سے زیادہ برآمدات۹۷؍ ارب ڈالر مالیت کی پیٹرولیم مصنوعات، ۱۹؍ ارب ڈالر کی ادویہ سازی،۱۲؍ ارب ڈالر کی ٹیلی کام آلات،۱۱؍ ارب ڈالر کی الیکٹریکل مشینری، ۸؍ ارب ڈالر مالیت کی ایلومینیم مصنوعات،۸ء۷؍ ارب ڈالر مالیت کی موٹر گاڑیاں اور کاریں اور الیکٹرانکس کی چار ارب ڈالر مالیت کا سامان برآمد کیا گیا ہے۔ مرکزی وزیر نےیہ بھیکہا کہ ترقی یافتہ ممالک جاپان، جنوبی کوریا، امریکہ، فرانس، جرمنی اور چین وغیرہ کی معیشت کی توسیع اور استحکام مینوفیکچرنگ سیکٹر کی مضبوطی پر مبنی ہے۔ اس لئے ہندوستان کو ترقی یافتہ ممالک کے زمرے میں لانے کیلئے ہندوستان میں مینوفیکچرنگ سیکٹر کی توسیع بہت ضروری ہے۔ میک ان انڈیا، ڈیزائن ان انڈیا، انوویٹ ان انڈیا جیسے وزیر اعظم نریندر مودی کے مشن نے بڑا کردار ادا کیا ہے۔ آج ہندوستانی مصنوعات کا معیار اور قیمت دونوں عالمی مارکیٹ میں مسابقتی ہیں اور اس کی وجہ سے ہماری برآمدات بڑھ رہی ہیں۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK