• Wed, 28 February, 2024
  • EPAPER

Inquilab Logo

ہندوستانی ٹیم ہاکی جونیئر ورلڈ کپ کیلئے روانہ

Updated: December 02, 2023, 9:25 PM IST | New Delhi

ملائیشیا کے کوالالمپور میں۵؍ دسمبر سے شروع ہونے والے ایف آئی ایچ ہاکی مردوں کے جونیئر ورلڈ کپ۲۰۲۳ء میں شرکت کے لئے ہندوستانی ٹیم سنیچر کو کیمپے گوڑا بین الاقوامی ہوائی اڈے (کے آئی اے) سے روانہ ہوگئی۔

Men`s Junior Team. Photo: INN
ہاکی کی جونیئر ٹیم روانگی کے وقت۔ (تصویر:آئی این این)

ملائیشیا کے کوالالمپور میں۵؍  دسمبر سے شروع ہونے والے ایف آئی ایچ ہاکی مردوں کے جونیئر ورلڈ کپ۲۰۲۳ء میں شرکت کے لئے  ہندوستانی ٹیم سنیچر کو کیمپے گوڑا بین الاقوامی ہوائی اڈے (کے آئی اے) سے روانہ ہوگئی۔ہندوستان ۲۰۲۱ء میں بھونیشور میں کھیلے جانےوالے ٹورنامنٹ کے آخری ایڈیشن میں فرانس سے ہارنے کے بعد چوتھے نمبر پر رہا تھا۔
ہندوستان کواسپین، کوریا اور کنیڈا کے ساتھ پول سی میں رکھا گیا ہے جبکہ دفاعی چمپئن ارجنٹائنا کو چلی، آسٹریلیا اور میزبان ملائیشیا کے ساتھ پول اے میں رکھا گیا ہے۔ پول بی میں جرمنی، فرانس، جنوبی افریقہ اور مصر کو رکھا گیا ہے جب کہ پول ڈی میں نیدرلینڈس، نیوزی لینڈ، بلجیم  اور پاکستان کے درمیان مقابلہ ہوگا۔ ہندوستانی ٹیم۵؍ دسمبر کو کوریا کے خلاف مہم کا آغاز کرے گی۔ ان کا اگلا میچ۷؍ دسمبر کو اسپین کے خلاف اور آخری پول اسٹیج میچ۹؍ دسمبر کو کنیڈا کے خلاف ہو گا۔ کوارٹر فائنل میں داخلہ یقینی بنانے کیلئے  ہندوستان کو پول سی میں ٹاپ دو میں رہنا ہوگا۔
ہندوستانی کپتان اتم سنگھ نے ملائیشیا جانے سے پہلے کہا کہ پچھلی بار ہمیں فرانس سے شکست کے بعد چوتھے مقام پر اکتفا کرنا پڑا تھا لیکن اس بار ٹیم پہلے سے زیادہ مضبوط ہے۔ ہم میدان میں اپنی بہترین کارکردگی پیش کرنےکی کوشش کریں گے اور امید ہے کہ ہندوستان تمغہ واپس لائے گا۔نائب کپتان ارجیت سنگھ ہندل نے کپتان کے خیالات کی دُہراتے ہوئے کہاکہ ’’پچھلے ورلڈ کپ کے بعد سے ٹیم میں کافی بہتری آئی ہے۔ ہم نے سلطان آف جوہر کپ ۲۰۲۲ء اور مینزجونیئر ایشیا کپ جیتا اور حال ہی میں سلطان جوہر کپ۲۰۲۳ء میں تیسرے نمبر پر رہے۔ ہم جانتے ہیں کہ ہم ایف آئی ایچ  ہاکی مینز جونیئر ورلڈ کپ۲۰۲۳ء جیتنے کے اہل ہیں، یہ وقت آنے پر اپنی صلاحیتوں کے مطابق بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کی بات ہے۔
ورلڈ کپ کی تیاریوں میں مصروف ہندوستانی ٹیم کو غیر متوقع حالات کی وجہ سے ٹیم کمپوزیشن میں غیر متوقع تبدیلیوں کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ شروع میں۱۸؍ رکنی ٹیم کا حصہ رہے شاردانند تیواری کو بیماری کی وجہ سے دستبردار ہونا پڑا اور ان کی جگہ سکھوندر کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK