• Thu, 22 February, 2024
  • EPAPER

Inquilab Logo

چہل قدمی: بلڈ پریشر کنٹرول کرنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے

Updated: January 23, 2024, 1:39 PM IST | Odhani Desk | Mumbai

جو لوگ اپنے دن کا زیادہ وقت بیٹھ کر گزارتے ہیں، اگر وہ ہلکی پھلکی چہل قدمی کو عادت بنالیں تو دن اور رات کو اپنے اوسط بلڈ شوگر کی بڑھتی ہوئی سطح کو کم کرسکتے ہیں۔

Photo: INN
تصویر : آئی این این

جو لوگ اپنے دن کا زیادہ وقت بیٹھ کر گزارتے ہیں، اگر وہ ہلکی پھلکی چہل قدمی کو عادت بنالیں تو دن اور رات کو اپنے اوسط بلڈ شوگر کی بڑھتی ہوئی سطح کو کم کرسکتے ہیں۔ یہ بات ایک ریسرچ سے ثابت ہوا ہے۔ ایریزونا یونیورسٹی کی تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ بلڈ گلوکوز کی سطح میں کمی لانے کے لئے اگر لوگ کچھ کرسکتے ہیں تو اس کے لئے سست رفتاری سے چہل قدمی کو عادت بنانا ہوگا۔ 
 تحقیق میں مزید بتایا گیا کہ دن بھر میں عام طور پر لوگ دفتری اوقات میں اپنا بہت زیادہ وقت بیٹھ کر گزارتے ہیں جو مختلف جسمانی امراض کا باعث بن سکتا ہے مگر اس سے بچنے کیلئے کچھ دیر کھڑے رہنا یا چہل قدمی مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔ اس تحقیق کے دوران محققین نے موٹاپے کا شکار ۹؍ افراد کے بلڈ شوگر اور بلڈ پریشر کے لیول کو ایک ہفتہ تک جانچا اور پھر انہیں دن میں ۱۰؍ سے ۳۰؍ منٹ تک کے پانچ وقفوں کے ساتھ کھڑے رہنے کی ہدایت کی گئی۔ 
 نتائج سے معلوم ہوا کہ چہل قدمی یا کھڑے رہنے کے نتیجے میں ان افراد کا بلڈ شوگر لیول معمول کی سطح پر آنا شروع ہوگیا۔ محققین کے مطابق طرز زندگی میں اس معمولی سی تبدیلی سے ۲۴؍ گھنٹے کے دوران بلڈ شوگر کی سطح میں ۵؍ سے ۱۲؍ فیصد تک کمی ہوتی ہے۔ n

متعلقہ خبریں

This website uses cookie or similar technologies, to enhance your browsing experience and provide personalised recommendations. By continuing to use our website, you agree to our Privacy Policy and Cookie Policy. OK